ھفتہ, 04 جولائی 2020


تدریسی عمل کی کوئی اجازت نہیں ہوگی،وزیرتعلیم کادوٹوک جواب

کراچی: محکمہ تعلیم کی اسٹیرنگ کمیٹی نے فیصلہ کیا ہے کہ تمام سرکاری اور نجی تعلیمی اداروں میں تدریسی عمل کی کوئی اجازت نہیں ہوگی البتہ اگر نجی تعلیمی ادارے آن لائن ایجوکیشن شروع کرنا چاہتے ہیں تو انہیں اس کی اجازت ہوگی.
 
نجی اسکولز اگر اپنے اساتذہ اور غیر تدریسی عملہ کو بلوانا چاہتے ہیں تو ان کو محکمہ صحت کی جاری کردہ ایس او پیز پر عمل پیرا ہونا ہوگا.
 
 سعید غنی کاکہنا ہےکہ پالیسی اور اسکولز کھولنے کے ساتھ ساتھ جو نجی اسکولز پہلی تا آٹھویں جماعت تک کے ان بچوں کو اگلے درجوں میں ترقی دینے پر تحفظات رکھتے ہیں، جن کے تعلیمی نتائج اس معیار کے نہیں ہیں اس پر نظرثانی کے لئے ایک سب کمیٹی بنادی گئ ہے، جو تمام صورتحال کا جائزہ لے کر اپنی تجاویز پیش کرے گی.

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment