اتوار, 18 اگست 2019


اہلیہ پرتشدد، محسن عباس کی گرل فرینڈکاموقف سامنےآگیا

کراچی: اداکار و گلوکار محسن عباس حیدر کی مبینہ گرل فرینڈ ماڈل نازش جہانگیر نے محسن کی اہلیہ فاطمہ کے الزامات کے جواب میں اپنا موقف بیان کیا ہے۔
 
2 روز قبل اداکار محسن عباس حیدر کی اہلیہ فاطمہ سہیل نے سوشل میڈیا پر اپنے شوہر کے ظلم اور بے وفائی کی داستان بیان کرکے شوبز سمیت پورے پاکستان میں ہلچل مچادی تھی۔ فاطمہ نے محسن عباس حیدر پر بے وفائی کا الزام لگاتے ہوئے کہا تھا ان کے شوہر کا چکر ماڈل نازش جہانگیر کے ساتھ چل رہا ہے اور جب اس بارے میں انہوں نے محسن سے استفسار کیا تو انہوں نے بجائے شرمندہ ہونے کے الٹاانہیں مارنا پیٹنا شروع کردیا اور بدترین تشدد کا نشانہ بنایا۔
 
فاطمہ کے اس انکشاف کے بعد سوشل میڈیا صارفین کی جانب سے ماڈل نازش جہانگیر کو ایک شادی شدہ عورت کا گھر برباد کرنے پر شدید تنقید کا نشانہ بنایاجارہا ہے۔ اس سارے معاملے میں نازش ابھی تک خاموش تھی تاہم اب انہوں نے انسٹاگرام پراپنا موقف ظاہر کرتے ہوئے کہا ہے کہ فاطمہ نے بغیر کسی ثبوت کے مجھ پر الزام لگایا کہ میرا اور اس کے شوہر کا آپس میں تعلق ہے اور آپ سب لوگ مجھ پر چڑھ دوڑے۔
 
نازش نے مزید لکھا جب فاطمہ کی ڈیلیوری ہونے والی تھی اس نے مجھے فون کیا اورمیں نے اسے مبارکباد بھی دی، اس وقت محسن شوٹنگ کے سلسلے میں کراچی میں موجود تھا اور میں اسلام آباد میں تھی۔ خیر اگر فاطمہ گھریلو تشدد کا شکار ہوئی ہےتو مجھے اس کے ساتھ ہمدردی ہے لیکن میں کہنا چاہتی ہوں کہ ان دونوں کے شادی شدہ مسائل کے پیچھے کی وجہ میں نہیں ہوں۔
 
نازش نے لکھا صرف محسن عباس حیدر ہی ہے جو بتاسکتا ہے اس معاملے میں بغیر کسی ثبوت کےمیرا نام کیوں لیاجارہاہے، کیونکہ اس سے میری شخصیت کا تاثر خراب ہورہاہے۔ میں ابھی تک صدمے میں ہوں کیونکہ میں ایسی انسان نہیں ہوں جو کسی کے کردار پر بات کرے میرے نزدیک یہ بہت ہی شرمناک عمل ہے۔ میں صرف یہ کہنا چاہتی ہوں صرف فاطمہ ہی نہیں ہے جو مشکل حالات سےگزررہی ہے بلکہ میرے لیے بھی یہ وقت مشکلوں بھرا ہے۔

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment