پیر, 24 فروری 2020


نیشنل ایکشن پلان پرایک اور جائزہ

ایمزٹی وی(اسالم آباد)وزیراعظم آفس اسلام آباد میں میں نیشنل ایکشن پلان کا جائزہ لینے کے لئے اعلی سطح کا اجلاس ہوا اجلاس میں ملکی داخلی و سلامتی اور نیشنل ایکشن پلان پر تبادلہ خیال کیاگیا جب کہ کوئٹہ دھماکے کے بعد حالیہ فیصلوں پر غور اورسیکیورٹی اداروں کے عزم اور قربانیوں کو سراہا گیا۔

 

اجلاس کے دوران نیشنل ایکشن پلان پرعمل درآمد کے جائزے کے لیے ٹاسک فورس بنانے کا فیصلہ کیا گیا، اس ٹاسک فورس میں وفاقی اور صوبائی حکومتوں کے نمایندے اور متعلقہ ایجنسیوں کے سربراہ شامل ہوں گے۔ اس موقع پر وزیر اعظم نے متعلقہ حکام کو ہدایت کی کہ نیشنل ایکشن پلان پر مکمل اور موثر عمل درآمد کے لیے کوئی کسر نہ اٹھارکھی جائے، دہشت گردی کے مکمل خاتمے کے لیے نتیجہ خیز اور بروقت ایکشن یقینی بنائیں۔

 

اجلاس میں وفاقی وزیرداخلہ چوہدری نثار، وزیرخزانہ اسحاق ڈار، مشیر قومی سلامتی لیفٹیننٹ جنرل (ر) ناصر جنجوعہ، سربراہ پاک فوج جنرل راحیل شریف، ڈی جی آئی ایس آئی لیفٹیننٹ جنرل رضوان اختر اور دیگر سیاسی و عسکری حکام نے شرکت کی۔

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment