ھفتہ, 31 اکتوبر 2020


عمران خان نےایک بار پھر نواز شریف سے استعفے کا مطالبہ کردیا،

ایمزٹی وی(اسلام آباد) چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے کہا ہے کہ احتجاج سے روکنے والے اپوزیشن رہنما خود کرپٹ ہیں۔

تشدد اور زور زبردستی کی گئی تو نقصان حکومت کا ہوگا۔ تیسری طاقت آئی تو ذمے دار نواز شریف ہوں گے۔

عمران خان نےایک بار پھر نواز شریف سے استعفے کا مطالبہ کردیا، انہوں نے ایف بی آر اور نیب بند کرکے نئے ادارے بنانےکا مطالبہ بھی کیا۔

چیرمین تحریک انصاف عمران خان نے کہا ہے کہ جب ادارے انصاف نہیں دے رہے تو احتجاج کرنا ہمارا حق ہے،اسلام آباد میں عوام کا سمندر آرہاہے۔ہمارے پُرامن احتجاج کو روکا گیا تو حکومت کو نقصان ہوگا۔

ڈیرہ اسماعیل خان روانگی سے قبل بنی گالہ میں میڈیا سے گفتگو میں عمران خان کا کہنا تھا کہ پُرامن احتجاج کرنا ہمارا حق ہے، گر ہم سڑکوں پر نہ نکلیں تو سب کرپشن بھول جائیں۔

عمران خان نے کہا کہ یہ چاہتے ہیں کہ ان کا کرپشن سے بنایا جانے والا پیسا بچ جائے، سڑکوں پرنکلنے سے منع کرنے والے خود کرپٹ ہیں، اپوزیشن سڑکوں پرنکلنے سے منع کررہی ہے، ایک صحافی کے سوال کے جواب میں عمران خان کا کہنا تھاسپریم کورٹ میں کیس چلتا رہے گااور ہمارا پر امن احتجاج بھی جاری رہے گا۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ عوام ایک طرف اور دوسری طرف کرپٹ مافیا ہے، ہمارا مطالبہ ہے کہ وزیراعظم استعفیٰ دیں ، پی ٹی آئی چیئرمین نے کہا ہمارا احتجاج اداروں کی کارکردگی کیخلاف بھی ہے، ایف بی آر، نیب، الیکشن کمیشن اور نیب نے پارلیمنٹ میں جاکر کہا کہ ہم پانامالیکس کی تحقیقات کے حوالے سے کچھ بھی نہیں کرسکتے۔

عمران خان نے کہا اگر تیسری قوت آئی تو ذمے دار نواز شریف ہوں گے،ہم احتجاج تیسری طاقت کو لانے کے لیے نہیں کررہے۔

عمران خان نے کہا کہ ہمارا احتجاج کرپٹ حکمرانوں سے کرپشن کا پیسہ واپس لانے اور اقتدار عوام کے اصل نمائندوں کو منتقل کرنے کے لیے ہے۔ ہمیں احتجاج کے آئینی اور قانونی حق سے کوئی بھی نہیں روک سکتا

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment