بدھ, 03 مارچ 2021


پولیس تحریک انصاف کے خلاف پھر سرگرم

 

ایمزٹی وی(اسلام آباد) تحریک انصاف کے 2 نومبر کے دھرنے سے قبل پولیس کی جانب سے پی ٹی آئی کارکنوں کی پکڑ دھکڑ کا سلسلہ جاری ہے جب کہ بنگش روڈ کے ذریعے بنی گالہ جانے والے پی ٹی آئی کارکنوں اور پولیس کے درمیان تصادم بھی ہوا۔
تحریک انصاف کے کارکنوں کی جانب سے پولیس پر پتھراؤ کیا گیا جب کہ پولیس کی جانب سے آنسو گیس کے شیل فائر کئے گئے، بعد ازاں پولیس نے زبردستی بنی گالہ جانے کی کوشش کرنے والے 50 افراد کو حراست میں لے لیا۔

تحریک انصاف کے رہنماؤں چوہدری سرور، عظمیٰ کاردار اور اور مسرت چیمہ نے بھی بنی گالہ جانے کی کوشش کی جب کہ پولیس نے عظمیٰ کاردار اور مسرت چیمہ کو عمران خان چوک پر روک لیا۔
اس کے علاوہ بنگش روڈ پر چیکنگ کے دوران تحریک انصاف سے تعلق رکھنے والے خیبر پختونخوا کے وزیر علی امین گنڈا پور کی گاڑی سے اسلحہ، آنسو گیس شیل فائر کرنے والی گن، بلٹ پروف جیکٹس اور گولیاں بھی برآمد ہوئیں جب کہ علی امین گنڈا پور فرار ہو گئے۔

 

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment