بدھ, 29 جنوری 2020


جنیوامیں پاکستان مخالف اشتہاری مہم پرسوئس حکومت سے شدید احتجاج

 

ایمزٹی وی(جینوا)جنیوا میں پاکستان مخالف اشتہاری مہم پر سوئزر لینڈ کے سفیر تھامس کولی کو دفتر خارجہ طلب کر کے پاکستان نے اپنا احتجاج ریکارڈ کراتے ہوئے احتجاجی مراسلہ انہیں دیا، دفتر خارجہ کا کہنا تھا کہ اشتہاری مہم پاکستانی سالمیت اور خود مختاری پر حملہ ہے جو کہ عالمی قوانین کی شدید خلاف ورزی ہے۔
تفصیلات کے مطابق پاکستان نے جنیوامیں پاکستان مخالف اشتہاری مہم پرسوئس حکومت سے شدید احتجاج کیا ہے۔ پاکستان میں تعینات سوئس سفیرتھامس کولی کو دفتر خارجہ طلب کر کے انہیں حکومت پاکستان کا احتجاجی مراسلہ دیا گیا ہے۔ پاکستان نے مطالبہ کیا ہے کہ سوئٹزر لینڈ کسی خود مختار ملک کے خلاف اپنی سرزمین استعمال نہ ہونے دے۔
سوئز ر لینڈ کی سرزمین پاکستان کے خلاف استعمال ہونا عالمی حقوق کی خلاف ورزی ہے ۔ پاکستان مخالف اشتہاری مہم ہماری سالمیت اور خود مختار پر حملہ ہے ۔ سوئس حکومت اس کے خلاف فوری اور مؤثرکارروائی کرے۔بلوچستان پاکستان کا سب سے بڑا صوبہ ہے اور ایک دہشت گرد تنظیم کے ذریعے ایسی اشتہار ی مہم پاکستان کے لئے ناقابل برداشت ہے۔
واضح رہے کہ جنیوا میں سوئس کی ایک اشتہاری کمپنی کے ذریعے دہشت گرد تنظیم بلوچ لبریشن آرمی نے جگہ جگہ پاکستان مخالف بینزر آویزاں کئے ہیں۔ بینرز پر ”فری بلوچستان “ کی عبارت درج ہے اور یہ شہر کی مرکزی شاہراہوں پر آویزاں کئے گئے ہیں۔

 

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment