منگل, 19 مارچ 2019


(ن) لیگ کے وکیل مقدمہ طویل کر رہے ہیں،فواد چوہدری

 

ایمز ٹی وی (اسلام آباد) سپریم کورٹ کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے فواد چوہدری نے کہا کہ شریف خاندان پاناما مقدمے میں سپریم کورٹ کے روبرو شواہد پیش کرنے میں ناکام ہوگیا تھا جبکہ عمران خان نے ساری منی ٹریل عدالت میں پیش کردی ہے جس کے بعد یہ مقدمہ ختم ہوگیا ہے ۔ اب ن لیگ کے وکیل کے پاس کہنے کو کچھ نہیں ہے وہ صرف مقدمہ طویل کر رہے ہیں۔ انہوں نے ن لیگی رہنماﺅں کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ یہ جلالپور جٹاں کا تھانہ نہیں بلکہ سپریم کورٹ آف پاکستان ہے، سپریم کورٹ ثبوتوں اور شہادتوں کے اوپر فیصلہ کرتی ہے ۔ فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ ابھی بھی حنیف عباسی کا اسی طرح لحاظ کیا گیا ہے جس طرح سپریم کورٹ نے پاناما پیپرز میں کیا تھا، سپریم کورٹ میں حنیف عباسی نے ایفی ڈیوٹ دیا کہ جہانگیر ترین کا نام پاناما پیپرز میں ہے، یہ بالکل جھوٹی بات ہے اور سپریم کورٹ اس بات پر انہیں تین سال کیلئے جیل بھجوا سکتی تھی۔ سپریم کورٹ ن لیگ کے چمچوں کڑچھوں کے معاملے میں بھی تحمل کا اظہار کر رہی ہے ، یہ جس طرح کی سپریم کورٹ اور ججز کے بارے میں زبان استعمال کرتے ہیں اس پر انہیں جیل بھجوایا جا سکتا ہے لیکن سپریم کورٹ کے ججز سیاسی معاملات میں دخل نہیں دینا چاہتے۔

 

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment