جمعرات, 22 اگست 2019


اپنے خلاف مقدمات پر نواز شریف جیل بھی جاسکتے ہیں, اکانومسٹ

اسلام آباد: عالمی جریدہ اکانومسٹ کے مطابق فیض آباد دھرنا مسلم لیگ (ن) کی عوامی حمایت کم کرنے کی کوشش تھا۔اپنے خلاف مقدمات پر نواز شریف جیل بھی جاسکتے ہیں لیکن مخالفین کیلئے پنجاب میں لیگی ووٹ بنک توڑنا مشکل ہو گا۔ دھرنا ختم کرنے میں فوج کی ثالثی پر سوالات اٹھائے جا رہے ہیں۔ عدالت نے بھی اس پر جواب طلب کیا جبکہ سول سوسائٹی کے رہنماﺅں نے اسے جمہوریت کی موت کا پروانہ قرار دیاہے۔روزنامہ نوائے وقت کےمطابق جریدہ مضمون میں لکھتا ہے کہ اداروں کی جانب سے بعض جماعتوں کے انضمام اور اتحاد بنانے کی کوششوں کے بھی انکشافات ہوئے۔ یہ خیال کیا جا رہا ہے کہ عمران خان سٹیبلشمنٹ اور مذہبی جماعتوں کی حمایت کرکے اقتدار میں آسکتے ہیں۔ تاہم پاکستان میں جب بھی سیاست میں اداروں کی مداخلت ہوئی، جمہوریت کی مقبولیت میں اضافہ ہوا اور ان کی جانب سے لائے گئے سیاستدان ایک الگ سیاسی قوت بن گئے جس کی ایک مثال نواز شریف خود ہیں۔

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment