بدھ, 28 اکتوبر 2020


طلال چوہدری کے وکیل نے 10 روز کی مہلت مانگ لی

 

ایمزٹی وی(اسلام آباد)سپریم کورٹ نے وزیرِمملکت برائے داخلہ اور مسلم لیگ (ن) کے رہنما طلال چوہدری کو توہین عدالت کیس میں جواب جمع کرانے کے لئے پیر تک مزید مہلت دے دی ہے۔
میڈیا زرائع کے مطابق سپریم کورٹ میں وزیرِمملکت برائے داخلہ طلال چوہدری کے خلاف توہین عدالت کیس کی سماعت جسٹس اعجاز افضل کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے کی۔ طلال چوہدری کے وکیل کامران مرتضیٰ عدالت میں پیش ہوئے اور مؤقف پیش کیا کہ مجھ سے پہلے طلال چوہدری کی وکیل عاصمہ جہانگیر تھیں تاہم اب وہ اس دنیا میں نہیں رہیں اور اب مجھے یہ خدمات دی گئی ہیں لہذٰا عدالت مجھے 10 روز کی مہلت دی جائے۔
جسٹس اعجاز افضل نے ریمارکس دیئے کہ گزشتہ سماعت میں بھی طلال چوہدری کو وقت دیا گیا تھا اور اب جو تاخیر آپ مانگ رہے ہیں وہ ضروری نہیں۔ کامران مرتضیٰ کا کہنا تھا کہ میرا ذاتی مسئلہ ہے جس کے لئے مہلت مانگ رہا ہوں اور میں سینیٹ کا امیدوار بھی ہوں جس کی تیاری کرنی ہے۔
جسٹس مقبول باقر نے ریمارکس دیئے کہ اس کیس کی آج تیسری سماعت ہے اور تمام فریقین تک کیس کی کاپیاں بھی پہنچ گئی ہیں۔ عدالت نے طلال چوہدری کو جواب جمع کرانے کے لئے پیر تک مہلت دیتے ہوئے کیس کی سماعت ملتوی کردی۔

 

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment