پیر, 19 اگست 2019


ایک اور قیامت کی تیاری گیس 190 فیصد تک مہنگی کردی گئی

اسلام آباد : اقتصادی رابطہ کمیٹی کے اجلاس میں گھریلو صارفین کیلئے گیس 190 فیصد تک مہنگی کردی گئی، نئی قیمتوں کا اطلاق یکم جولائی سے ہوگا، قیمتوں میں اضافے سے حکومت کو500 ارب سے زائدریونیوحاصل ہوگا۔
 
مشیر خزانہ حفیظ شیخ کی زیرصدارت اقتصادی رابطہ کمیٹی کا اجلاس ہوا ، جس میں گھریلوصارفین کیلئےگیس کی قیمتوں میں اضافے کی منظوری دے دی گئی۔
 
گھریلو صارفین کیلئے گیس 190 فیصد تک مہنگی ہوجائے گی جبکہ دیگرکیٹیگریز کےلیےگیس قیمتوں میں31 فیصد سےزیادہ اضافے کی منظوری دی گئی، نئی قیمتوں کا اطلاق یکم جولائی سے ہوگا۔
 
ذرائع کا کہنا ہے گیس کی قیمتوں میں اضافہ آئی ایم ایف کی شرائط میں شامل تھا، قیمتوں میں اضافے سے حکومت کو500 ارب سے زائدریونیوحاصل ہوگا، حکومت دسمبر میں گیس کی قیمتوں کا دوبارہ جائزہ لے گی۔
 
اجلاس میں سعودی عرب سے ادھار تیل کے طریقہ کار کی بھی منظوری دی گئی، پیپرا رولز کا اطلاق نہیں ہوگا، سعودی عرب سے ادھار تیل کی سہولت یکم جولائی سے شروع ہو گی، پی ایس اوسعودی عرب سے پیٹرولیم مصنوعات کی درآمد کرے گا۔
 
اقتصادی رابطہ کمیٹی کے اجلاس میں پاکستان جیمز جیولری کمپنی کو ضمنی گرانٹس فراہم کرنے کی سمری منظور کرلی گئی۔
 
یاد رہے پیٹرولیم ڈویژن نےگیس کی قیمتوں میں اضافےکی سمری ای سی سی کو ارسال کی تھی، جس میں گھریلو صارفین کیلئےگیس کی قیمت میں دوسو فیصد اور کمرشل صارفین کیلئےگیس اکتیس فیصد مہنگی کرنےکی تجویزدی گئی تھی۔
 
سمری میں ماہانہ پچاس یونٹ والےگھریلو صارفین کیلئےگیس پچیس فیصد، سو یونٹ ماہانہ والوں کیلئے پچاس فیصد، اور دو سو یونٹ والے گھریلو صارفین کیلئے پچھتر فیصد گیس مہنگی کرنے کی تجویز دی گئی جبکہ نیٹ ماہانہ تین سو یونٹ والے گھریلو صارفین کے لئے گیس کی قیمت میں سو فیصد اضافہ کرنے کی تجویز تھی۔
 
کمرشل صارفین کیلئے گیس کی قیمت میں اکتیس فیصد مہنگی کرنے کی سفارش کی گئی تھی۔

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment