جمعرات, 22 اکتوبر 2020
×

Warning

JUser: :_load: Unable to load user with ID: 46


قومی اکشن پلان پر ایکش لے لیا گیا

ایمزٹی وی(اسللام آباد)وزیراعظم نواز شریف نے قومی ایکشن پلان کے نکات پرست روی اوردیگر ایشوز پر عسکری قیادت کی حالیہ تشویش کو دورکر نے کیلئے براہ راست اقدام کا فیصلہ کیاہے۔تفصیلات کے مطابق حکومتی حلقوں کا کہنا ہے کہ اعلیٰ ترین حکومتی سطح کی جانے والی مشاورت میں عسکری قیادت کے حالیہ بیان کا جائزہ لیا گیا ہے اوراس بات پر اتفاق کیا گیاکہ وفاق اور عسکری قیادت میں تمام ایشوز پر اتفاق رائے ہونا ضروری ہے۔ ذرائع کہنا ہے کہ حکومت قومی ایکشن پلان اور سیکیورٹی امور پر پارلیمانی جماعتوں یا پارلیمنٹ کا ان کیمرہ اجلاس بلوانے بھی مشاورت کررہی ہے تاہم اس سے قبل قومی ایکشن پلان کا جائزہ اجلاس طلب کیا جاسکتا ہے ۔اہم ذرائع کا کہناہے کہ موجودہ صورتحال میں فی الحال ملک میں کسی سیاسی ہلچل کے آثار نہیں ہیں۔ اس حوالے سے وزیراعظم جلد عسکری قیادت سے ملاقات کریں گے، ملاقات میں آگاہ کیا جائے گا کہ حکومت عسکری قیادت کی مشاورت سے قومی ایکشن پلان مکمل عمل درآمد کے لئے مزید مربوط اقدام کرے گی۔ فاسٹ ٹریک پالیسی میں حائل رکاوٹوں کو دور کرنے کے لئے حکومت پارلیمانی جماعتوں اور ماہرین قانون کی مشاورت سے مزید قانون سازی پارلیمنٹ سے کرائے گی۔ حکومتی ذرائع کا کہنا ہے کہ وزیراعظم فاٹا میں اصلاحات کے لیے قائم کمیٹی کے اغراض ومقاصد سمیت نقل مکانی کرنے والے افراد کی دوبارہ آباد کاری کے حوالے سے حکومتی اقدام پر بھی تبادلہ خیال کریں گے۔

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment