پیر, 19 اگست 2019


بلدیاتی انتخابات میں جانبدار عملے کےخلاف کاروائی کا فیصلہ!

ایمزٹی وی(اسلام آباد) سندھ کے پانچ اضلاع میں پولنگ کرانے یا نہ کرانے کے فیصلے کے سلسلے میں چیف الیکشن کمشنر سردار رضا خان کی سربراہی میں اجلاس ہوا ۔ اجلاس کے دوران چیف الیکشن کمشنر جسٹس ریٹائرڈ سردار رضا کا کہنا تھا کہ صاف شفاف انتخابات کرانا الیکشن کمیشن کی ذمہ داری ہے جسے ہر صورت پورا کیا جائے گا جب کہ انتخابات میں تمام سیاسی جماعتوں کو یکساں میدان فراہم کیا جائے گا۔ان کا مزید کہنا تھا کہ سندھ کی سیاسی جماعتوں کی جانب سے انتخابی عملے کی جانبداری سے متعلق شکایات موصول ہوئی ہیں جس کا سخت نوٹس لیا ہے، جانبدار انتخابی عملے کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔ صوبائی حکومتیں الیکشن کمیشن کو معاونت فراہم کرنے کی پابند ہیں۔ سیکیورٹی پرکسی قسم کاکوئی سمجھوتا نہیں ہوگا۔واضح ر ہے کہ گزشتہ روز اجلاس میں سندھ اور پنجاب کے بلدیاتی انتخابات کے دوسرے مرحلے میں 11 ہزار 869 پولنگ اسٹیشن قائم کئے جائیں گے جن میں 960 کو انتہائی حساس اور 3 ہزار 112 پولنگ اسٹینشنز کو حساس قرار دیا گیا ہے۔

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment