جمعہ, 05 مارچ 2021


مودی کابینہ کے آدھے ارکان مجرمانہ کارروائیوں میں ملوث 

ایمز ٹی وی (فارن ڈیسک) نریندرمودی کو بھارتی عوام نے  بھاری مینڈیٹ دے کر رواں برس وزارت عظمیٰ کے مسند پر بٹھایا تاکہ وہ اپنے ماضی کے برعکس ملک کی ترقی اور عوام کی بہبود کے لئے کام کرسکیں، لیکن بھارت کو ترقی کی راہ میں گامزن کرنے کا عہد لے کر مودی نے جو کابینہ بنائی ہے وہ بھی اپنی مثال آپ ہے اور ان کی کابینہ کے آدھے ارکان خود مجرمانہ کارروائیوں اور سنگین انتخابی بے ضابطگیوں میں ملوث ہیں۔ 

نریندر مودی کی کابینہ میں شامل 31 وزرا کے خلاف بھارت کے مختلف علاقوں میں مختلف نوعیت کے مقدمات درج ہیں جن میں سے 20 وزرا پر جرائم کے واقعات میں بالواسطہ جبکہ 11 وزرا پر براہ راست ملوث ہونے کے الزامات ہیں ، چند ایک تو ایسے بھی ہیں جن کے خلاف قتل، اقدام قتل اور مذہبی فسادات کو ہوا دینے کے مقدمات درج ہیں۔

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment