جمعہ, 04 دسمبر 2020


سپریم کورٹ میں لیڈی ہیلتھ ورکرز کے کیس کی سماعت   

ایمزٹی وی (اسلام آباد) سپریم کورٹ میں لیڈی ہیلتھ ورکرز کے کیس کی سماعت کے دوران جسٹس جواد ایس خواجہ نے ریمارکس میں کہا کہ قوم کی بیٹیوں کو نا ستایا جائے۔ اُن کے حقوق کا تحفظ کیا جائے گا ۔ سپریم کورٹ میں لیڈی ہیلتھ ورکرز کو مستقل کرنے سے متعلق کیس کی سماعت ، جسٹس جواد ایس خواجہ کی سربراہی میں دو رکنی بنچ نےکی ۔ سندھ اور بلوچستان نے لیڈی ہیلتھ ورکزر کی مستقلی سے متعلق بیان حلفی عدالت میں جمع کر ائے ۔ جسٹس جواد ایس خواجہ نے ریمارکس میں کہا کہ کوئٹہ میں چار لیڈی ہیلتھ ورکرز سمیت 42 ہیلتھ ورکرز جان کی بازی ہار چکی ہیں ۔ قوم کی بیٹیوں کو اس طرح نا ستایا جائے، عدالت اُن کے حقوق کا مکمل تحفظ کرے گی ۔ انہوں نے کہا کہ سندھ اور بلوچستان 10 دنوں میں لیڈی ہیلتھ ورکرز کی مستقلی کا نوٹیفیکشن جاری کریں ۔ کیس کی سماعت ایک ماہ کے لئے ملتوی کردی گئی۔

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment