جمعہ, 27 مئی 2022


میرے خلاف ایک عالمی سازش کا امکان بھی ہوسکتا ہے، پر ویز مشرف 

 ایمز ٹی وی (اسلام آباد) سابق صدر پر ویز مشرف نے کہا ہے کہ لگتا ہے 2007ءمیں میرے خلاف ایک منظم مہم چلائی گئی،میرے خلاف ایک عالمی سازش کا امکان بھی ہوسکتا ہے۔انکا کہنا تھا کہ جب میرا کیس آگئے بڑھے گا تو سب سامنے آئینگے جو ایمرجنسی کے اقدامات میں شامل تھے، مشرف نے کہا کہ اکبر بگٹی اور لال مسجد آپریشن کا فیصلہ حکومت کا تھا،جب بگٹی کی خبر آئی تو میں مری میں نہیں تھا یہ کہنا غلط ہے کہ میں مری میں تھا اور ڈانس کررہا تھا۔ اگر بگٹی کو مارنا مقصود ہوتا تو چار افسر وہاں موجود نہ ہوتے، کسی اور نے اکبر بگٹی کی غار پر راکٹ فائر کئے یا دھماکہ کیا، بلوچستان آپریشن میں 70علیحدگی پسندوں کو مارا گیا۔ اگر کو ئی علیحدگی پسند ملک کے اندر یا باہر رہ کر یہ کہے کہ وہ پاکستان کے ساتھ نہیں رہنا چاہتا تو اس کا کوئی مستقبل نہیں ہے۔ لال مسجد، افتخار چوہدری اور بلوچستان آپریشن کے فیصلے درست تھے، ای سی ایل کا معاملہ اپنی وکلاءٹیم پر چھوڑرہا ہوں،میں ایک آزادی شہری ہوں جب چاہوں ملک سے باہر جاﺅں اور جب چاہوں واپس آﺅں، یہ میرا ملک ہے جب چاہوںملک میں آجا سکتا ہوں، میرا ملک سے باہر جانے کا اب بھی ارادہ ہے لیکن میں بار بار حکومت سے درخواست نہیں کرسکتا کہ میرا نام ای سی ایل سے نکالا جائے۔حکومت میں چیک اینڈ بیلنس کیلئے فوج کا کردار ضروری ہے ۔ میں سیاست میں نہیں لیکن اب بھی 58ٹو بی کا حامی ہوں۔

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment