پیر, 26 اگست 2019


برف باری اور تیز بارش کا امکان ،کشمیر۔


ایک تازہ مغربی مغرب جموں اور کشمیر سے نکل رہا ہے اور اس کے حوصلہ افزائی کرکلون سرکل شمالی اترستان اور ملحقہ پنجاب اور ہریانہ سے زیادہ ہے. اس طرح، جموں اور کشمیر کے بارے میں بکھرے ہوئے بارش اور برف شروع ہو گی جس میں آہستہ آہستہ اضافہ ہو گا. جب نظام مشرق وسطی میں منتقل ہوجائے گا تو بارش پردیش اور اتھارھن کے ساتھ بارش بھی شروع ہو گی. پہاڑی ریاستوں پر کچھ بھاری منتروں کا امکان حکمرانی نہیں کیا جا سکتا.مشرق وسطی پردیش تک اس مشرق وسطی گراو¿نڈ میں جنوبی مشرق وسطی تک ایک مشرقی مغرب گرت بڑھا رہا ہے. راجستھان، پنجاب اور ہریانہ کے بہت سے حصوں میں بارش اور تھندوں کی بھاری سرگرمیوں کو بھی کچھ جگہوں پر جلانے کا امکان ملے گا. دہلی اور مغرب اتر پردیش پر بکھرے ہوئے بارش بھی ممکن ہیں.بیج بنگال سے عرب سمندر اور جنوب مشرقی علاقوں سے جنوب مغرب کی ہواو¿ں کی ضم کرنے کے باعث ملک کے مرکزی حصوں میں ایک سنگھ زون بنایا گیا ہے. اس طرح، مدھیہ پردیش، ودھارہ اور شمال مدھ مہاراشٹر کے حصوں پر بکھرے ہوئے بارش اور پھولوں کے پھولوں کو دیکھا جائے گا. موسم باقی جگہوں پر خشک رہیں گے. تاہم، گجرات اور مدھیہ پردیش کے کئی حصوں میں کم سے زیادہ کم ہو سکتی ہے.

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment