منگل, 17 ستمبر 2019


میں گالیاں کھا نے کےلیے تیار ہوں چیئرمین کےالیکٹرک

 
 
 
 
 
کراچی : چیئرمین کےالیکٹرک کےچیئرمین اکرام سہگل کاکہناتھاکہ کراچی میں پیش آنے والے واقعہ کی ذمہ داری ادارہ قبول کرتاہےتاہم یہ صرف کے الیکٹرک کا قصور نہیں، غیرقانونی کنڈے اور کیبل آپریٹرز بھی ذمہ دارہیں۔
 
چیئرمین کےالیکٹرک اکرام سہگل نے کراچی میں بارشوں میں اموات کے حوالے سے کہا چیئرمین کےالیکٹرک کاعہدہ سنبھالا تو کراچی میں پیش آنے والے واقعہ کی ذمہ داری ادارہ قبول کرتا ہے ، یہ صرف کےالیکٹریک کا قصور نہیں، غیرقانونی کنڈےاورکیبل آپریٹرز بھی ذمہ دارہیں۔
 
اکرام سہگل کا کہنا تھا کہ انٹرنیٹ کیبل والوں کوکیوں کھلی چھٹی دی گئی ہے، یقینی بنائیں کہ انٹرنیٹ کیبل بجلی کی کھمبوں میں نہ لگے ہوں، انٹرنیٹ کیبل کا لگنا مکمل طور پر غیر قانونی ہے۔
 
 
چیئرمین کے الیکٹرک نے کہا بارش کےدوران ہماراعملہ بغیرچھٹی کے 72گھنٹے تک کام کرتارہا، اسے بھی سراہنا چاہیے، جہاں جہاں ہماری غلطی انکوائری میں ثابت ہوئی اسے دور کریں گے ، ہمیں دشواری ہےلیکن ہماری جو ذمےداری ہے وہ لیں گے۔
 
ان کا کہنا تھا کہ کراچی میں کچرا جمع ہونے کا مسئلہ حل نہیں کیا جاسکا، کچرا جمع ہونے پر ہمارے تحفظات ہیں، کراچی میں سیلابی صورتحال کے لئے کوئی نالہ نہیں بنایاگیا، کچرے کی صورت حال سب کےسامنے ہے، صفائی مہم کے لیے ہم نے 2کروڑ روپے دیئےہیں۔
 
کچرے کی صورت حال سب کےسامنے ہے، صفائی مہم کے لیے ہم نے 2کروڑ روپے دیئےہیں
اکرام سہگل نے کہا کچرا، پانی جمع ہوتو بجلی بحال رکھنے پر کرنٹ لگنے کا خدشہ ہوتاہے، جانوں کوخطرے سے بہتر ہے کہ میں بجلی نہ ہونے پرگالیاں کھالوں ، جانی نقصان سے بہتر ہے کہ میں بجلی نہ ہونے پر گالیاں کھالوں۔
 
چیئرمین کے الیکٹرک کا مزید کہنا تھا کہ صفائی مہم کسی ایک کی نہیں وزیراعلیٰ سندھ اورسب کی ہے، ایمرجنسی صورتحال میں علی زیدی نے پہل کی وہ قابل ستائش ہیں، صفائی کے لیے صوبائی حکومت کی کاوشوں کو بھی داد دیتاہوں۔

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment