جمعہ, 21 فروری 2020


ٹک ٹاک پرپابندی عائدمگرکیوں؟ تہلکہ خیزانکشافات سامنےآگئے

مانیٹرنگ ڈیسک : غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق چینی ایپ ٹک ٹاک کی انتظامیہ نے گمراہ کن معلومات کے خلاف بڑی پابندی عائد کردی، انتظامیہ کا کہنا ہے کہ ایسی ویڈیوز جس سے عوام کو نقصان پہنچ سکتا ہے وہ ٹک ٹاک سے ہٹا دی جائیں گی۔

انتظامیہ کا کہنا ہے کہ ٹک ٹاک پر غلط معلومات پھیلانے والی ویڈیوز کو ہٹا دیا جائے گا، ایسی ویڈیوز بھی ہٹائی جائیں گی جس سے کسی فرد کی صحت یا وسیع تر عوامی مفاد کو نقصان پہنچتا ہوں۔ ٹک ٹاک انتظامیہ کا کہنا تھا کہ ہم نامعلوم معلومات کے ذریعے پھیلائے جانے والے مواد کو بھی ہٹا دیتے ہیں۔

پاکستان میں بھی ٹک ٹاک بندکرنےکی صدائیں بلند

واضح رہے کہ ٹک ٹاک ویڈیو شیئرنگ کی مقبول ترین اپ ہے جس میں لوگ ویڈیوز بنا کر شیئر کرتے ہیں اور ویڈیوز کے منفی پہلو بھی سامنے آئے تھے جس پر انتظامیہ نے ایکشن لیا ہے۔ یاد رہے کہ یکم جنوری کو امریکی حکام نے سائبر خطرات سے بچنے کے لیے سرکاری موبائل فونز میں ٹک ٹاک کے استعمال پر پابندی لگادی تھی۔

پاکستان زیادہ ٹک ٹاک ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے والے ممالک میں شامل

امریکی فوج کی ترجمان نے میڈیا کو بتایا کہ فوج نے اپنے عہدیداروں کو دسمبر کے وسط میں ہدایت کی تھی کہ سرکاری موبائل میں ٹک ٹاک کا استعمال روک دیں اور اسی طرح امریکی نیوی نے بھی ایسے ہی اقدامات اٹھائے ہیں۔

دنیا بھر میں لاکھوں صارفین کے زیر استعمال ٹک ٹاک ایپ پر اس سے قبل بھی امریکا اور دیگر ممالک میں شکوک و شبہات کا اظہار کیا گیا تھا جس کے باعث اس کی جانچ بھی کی گئی تھی۔خیال رہے کہ ٹک ٹاک اپنے صارفین کو 15 سیکنڈز کے ویڈیو کی سہولت فراہم کرتی ہے، گانوں اور دیگر ویڈیوز کو دلچسپ بھی بنایا جاتا ہے جبکہ صارفین اس کو محدود بھی کرسکتے ہیں

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment