پیر, 30 نومبر 2020


سال کامختصرترین دن اور طویل ترین رات گزر گئی

مانیٹرنگ ڈیسک: رواں سال کے لیے 21 اور 22 دسمبر کی درمیانی رات پورے سال کی طویل ترین رات تھی جو گزر چکی جبکہ 22 دسمبر کا دن پورے سال کا سب سے مختصر دن تھا۔

فلکیاتی اداروں کے مطابق ہفتے اور اتوار کی درمیانی شب زمین کے شمالی نصف کرے (Northern Hemisphere) میں سال کی طویل ترین رات تھی اور اتوار کا دن سال کا مختصر ترین دن گزرا۔
یہ موقع ہر سال دسمبر کے مہینے میں آتا ہے اور اس کی تاریخیں 20 سے 23 دسمبر تک کسی بھی دن ہوسکتی ہیں۔ اس سال یہ موقع گزشتہ رات گزارا۔

واضح رہے کہ وہ موقع جب شمالی نصف کرے میں سال کی طویل ترین رات ہو، اسے فلکیات کی زبان میں ’’انقلابِ سرما‘‘ (winter solstice) یا ’’انقلابِ شمالی‘‘ (Northern solstice) بھی کہا جاتا ہے۔ البتہ اس حوالے سے ایک عام غلط فہمی یہ پائی جاتی ہے کہ انقلابِ سرما کے موقع پر زمین کا سورج سے فاصلہ سب سے زیادہ ہوتا ہے؛ ایسا نہیں ہوتا۔

اس کے برعکس، حقیقت یہ ہے کہ زمین اپنے محور پر 23.4 درجے جھکی ہوئی ہے جبکہ محوری گردش (axial rotation) کے دوران زمین کا اپنا محور بھی کسی گھومتے ہوئے لٹو کی مانند لڑکھڑاتا رہتا ہے۔

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment