پیر, 25 مارچ 2019


اسلام آباد میں60 ہزاراسلحہ لائسنس کی تصدیق جن میں سے 1800جعلی نکلے

ایمزٹی وی: (اسلام آباد) وزارت داخلہ نے3سال قبل33,000 سے زائد جعلی لائسنس جاری ہونے کے اسلحہ لائسنس اسکینڈل کےبعد بڑے پیمانے پرتحقیقات کاآغازکیا تھا۔ تحقیقات کا آغازہونے کے بعد نئے اسلحہ لائسنسزکے اجرا پرپابندی لگادی گئی جوتاحال برقرار ہے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ وزارت داخلہ نے ایک لاکھ60 ہزارلائسنسوں کی تصدیق کرنی ہے اورمتعلقہ سیکشن کوصرف اسی پردن رات کام کرنے کی ہدایت ہے جوکہ وہ جاری رکھے ہوئے ہے۔

تصدیق کے عمل میں لائسنس ہولڈرز کو کہاگیا تھاکہ وہ کسی اپنے لائسنس کی تصدیق کرواناچاہتے ہیں تو کرواسکتے ہیں تاکہ انھیں مشکل کاسامنا نہ ہو۔ ذرائع کاکہناہے کہ وزارت داخلہ کے اعلیٰ حکام نے وزیرداخلہ کوتجویزکیا ہےکہ ارکان پارلیمنٹ کی طرف سے بھی بار بار اسلحہ لائسنسوں پر پابندی کے بارے میں تحفظات کا اظہارکیاجارہا ہے۔

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment