ھفتہ, 14 دسمبر 2019


اٹلی میں زلزلے کی پیشنگوئی کرنے میں ناکامی پر سائنسدانوں کو قتلِ غیرارادی کے الزام  میں دی جانے والی سزا کالعدم قرار -

ایمز ٹی وی( فارن ڈیسک)

اٹلی میں لاقلا کے علاقے میں آنے والے زلزلے کی پیشنگوئی کرنے میں ناکامی پر

 چھ سائنسدانوں اور ایک سرکاری اہلکار کو اس کیس میں چھ سال قید کی سزا سنائی گئی تھی 

سال 2009 میں لاقلا میں آنے والے زلزلے میں 309 افراد ہلاک ہو گئے تھے۔

عدالت کے جج فبریزیا ایڈا فرینکابنڈارا نے فیصلے میں کہا کہ کوئی کیس تھا ہی نہیں جس کا جواب دیا جائے۔

استغاثہ اب بھی سزا کے فیصلے کو برقرار رکھنے کے لیے اعلیٰ عدلیہ میں اپیل کا حق رکھتے ہیں‘

اس مقدمے کے ساتوں ملزمان سنہ 2009 میں اٹلی میں قدرتی آفات کے خطرے پر نظر رکھنے والی کمیٹی کے ارکان تھے۔

ایک مقامی سائنسدان نے اس زلزلے سے ایک ہفتہ پہلے خبردار کیا تھا کہ علاقے میں گیس کی بڑھی ہوئی مقدار کی وجہ سے زلزلہ آنے کے امکانات ہیں۔ ان خدشات کی بناء پر آفات نگرانی کمیٹی کے ارکان کو لاقلا بھیجا گیا تھا۔

کمیٹی کے ارکان نے وہاں حکام کے ساتھ ایک مختصر ملاقات کے بعد لاقلا کے لوگوں سے کہا تھا کہ فکر کی کوئی بات نہیں ہے اور انھیں محفوظ مقامات پر منتقل کرنے کی ضرورت نہیں ہے۔

تاہم اگلے ہی دن چھ اپریل سنہ 2009 کو لاقلا میں چھ اعشاریہ تین شدت کا زلزلہ آیا جس سے تین سو نو افراد ہلاک ہوگئے تھے۔

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment