پیر, 26 اکتوبر 2020


جنوبی کوریا میں کشتی کے کپتان کو لاپروائی برتنے کے لیے 36 سال قید کی سزا 

ایمز ٹی وی (فارن ڈیسک)

جنوبی کوریا میں کشتی کے حادثے میں کپتان کو لاپروائی برتنے کے جرم میں 36 سال قید کی سزا سنائی گئی ہے جبکہ دوسرے 13 افراد کو 20 سال تک کی سزا سنائی گئی ہے۔

استغاثہ نے ان پر قتل عام کا الزام لگاتے ہوئے سزائے موت کا مطالبہ کیا تھا لیکن جج نے انھیں اس الزام سے بری کر دیا، تاہم لاپروائی برتنے کے لیے سزا سنائی۔

سیول فیری کے 15 عملوں پر کشتی حادثے کے لیے مقدمہ چلایا گیا اور انھیں سزا سنائی گئی

جنوبی کوریا کے شہر گوانگجو میں موجود سٹیو ایونز کا کہنا ہے کہ لی کی عمر 70 سال کے قریب ہے اور اس سزا کے بعد یہ اندازہ لگایا جا سکتا ہے کہ اب وہ اپنی ساری عمر جیل میں ہی گزاریں گے۔

واضح رہے کہ فیری کے کپتان کو حادثے کے بعد بہت سے مسافروں کو کشتی پر چھوڑ کر بھاگتے ہوئے دیکھا گیا تھا اور

سماعت کے دوران لی نے مسافروں کو چھوڑ کر بھاگنے پر معافی مانگی ہے۔

اس حادثے کے بعد ملک گیر پیمانے پر غم و غصے کی لہر دوڑ گئی تھی اور فیری کے 

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment