ھفتہ, 20 اگست 2022


امتحانی مراکزتاخیرسےپہنچنےپرطلباپرچےدینےسےقاصر

لاہور: بورڈ آف انٹرمیڈیٹ اینڈ سیکنڈری ایجوکیشن (BISE) لاہور نے جمعہ کے روز صوبائی دارالحکومت میں جاری انٹرمیڈیٹ امتحانات میں تاخیر سے پہنچنے والے درجنوں طلباء کوامتحانی مراکز میں داخلے سے روک دیا۔

تفصیلات کے مطابق لارنس روڈ کے امتحانی مرکز پر تعینات بی آئی ایس ای لاہور کے عملے نے طلباء کو امتحان میں شامل ہونے سے روک دیا کیونکہ وہ جاری مون سون سیزن کی وجہ سے نامساعد حالات کے باعث پیپر شروع ہونے کے آدھے گھنٹے بعد پہنچ گئے۔

طلباء نے ابتدائی طور پر عملے سے درخواست کی کہ وہ انہیں پیپر میں بیٹھنے دیں کیونکہ پیپر میں ناکامی سے ان کا پورا تعلیمی سال ضائع ہو جائے گا۔ تاہم کئی درخواستوں کے باوجود انہیں داخلے سے منع کرنے پر انہوں نے احتجاج کا سہارا لیا۔

نتیجے کے طور پر، BISE لاہور کے عملے نے متعلقہ تھانے کو اطلاع دی اور اس کی ایک ٹیم فوری طور پر موقع پر پہنچ گئی۔ افسران نے نہ صرف احتجاج کرنے والے طلباء کو منتشر کیا بلکہ ان میں سے کئی کو گرفتار بھی کیا۔

دوسری جانب، BISE لاہور کے حکام نے لارنس روڈ کے امتحانی مرکز میں تعینات اپنے عملے کے فیصلے کا دفاع کرتے ہوئے کہا ہے کہ عملے کے ارکان دیر سے آنے والوں کو ایڈجسٹ کرنے کے پابند نہیں ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ طلباء کو واضح طور پر ہدایت کی گئی ہے کہ وہ پرچہ شروع ہونے سے کم از کم ایک گھنٹہ قبل امتحانی مراکز میں اپنی موجودگی کو یقینی بنائیں تاکہ اس قسم کی تکلیف سے بچا جا سکے۔

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment