پیر, 17 جنوری 2022


پی ایس ایل کےلئےسخت ترین بائیوببل پلان تشکیل

لاہور: پی ایس ایل سیزن 7 میں شمولیت کرنے والے کرکٹرز پر کڑی پابندی ہوگی۔

پی ایس ایل سیزن 7 تیاریاں جہاں عروج پر ہیں وہیں تمام کرکٹرز کوکڑی پابندیوں کی زد میں رہنا پڑے گا ایونٹ کی راہ میں کوئی رکاوٹ نہ آئے اسکے لیے پاکستان کرکٹ بورڈ نے سخت ترین بائیو ببل پلان تشکیل دیا ہےجسکےبعدبائیو ببل کے اندر ہر ٹیم کا اپنا ببل ہوگا جس میں دوسرا کوئی داخل نہیں ہو سکے گا۔

کورونا وائرس کی وجہ سے کھلاڑیوں کی موومنٹ انتہائی محدود رکھی جائے گی ، کسی کو دوسرے اسکواڈ کے رکن سے ملاقات کی اجازت بھی نہیں ہوگی۔۔آرمی میڈیکل کور سے تعلق رکھنے والے بائیو ببل انٹیگریٹی منیجر معاملات کی نگرانی کریں گےاسکواڈز کیلیے الگ لفٹ، ڈائننگ ایریاز ہوں گے روزانہ اسکواڈز کے ریپیڈ انٹیجن جبکہ ہر 2،3 روز میں پی سی آر ٹیسٹ لیے جائیں گے۔گزشتہ برس تک صرف ناشتہ پی سی بی کی جانب سے ہوتا ہے باقی دو وقت وہ ڈیلی الاؤنس میں سے رقم خرچ کر کے کھانا کھاتے تھے،ہوٹل کا اسٹاف بھی ببل میں ہی رہے گا۔کھلاڑی باہر سے کھانا نہیں منگوا سکیں گےاور اہل خانہ کو ساتھ رکھنے کی اجازت بھی نہیں ہوگی ۔

جب تک 2 ٹیمیں ایک ساتھ وائرس کی زد میں نہیں آئیں ٹورنامنٹ جاری رہے گا، جب مجبوراً روکنا پڑا تو7 دن کے وقفے سے میچز دوبارہ شروع ہوں گے، ایک دن میں 2 مقابلے کرائے جائیں گے، کم پڑے تو ریزرو پول سے لیے جا سکیں گے۔

 

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment