پیر, 24 جون 2024

 

ایمز ٹی وی(کراچی)سندھ اسمبلی نے ترمیم شدہ انسداد بدعنوانی بل 2017 کثرت رائے سے منظور کرلیا۔ سندھ اسمبلی میں صوبائی وزیر قانون ضیا الحسن لنجار نے ترمیم شدہ انسداد بدعنوانی بل 2017 پیش کیا۔ ایوان نے رسمی بحث کے بعد بل کی منظوری دیدی تاہم بل کے خلاف ایم کیو ایم، مسلم لیگ (ن)، مسلم لیگ فنکشنل اور پی ٹی آئی نے واک آؤٹ کیا۔ اس موقع پر اسمبلی میں اظہار خیال کے دوران وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ حکومت کا کوئی رول نہیں چیئرمین کے تقرر میں، نیب اور ایف آئی اے کا قانون وفاق نے پا س کیا جب کہ گورنر کے پیغام کے بعد اسمبلی بل کو دوبارہ پاس کر چکی ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ آر او پلانٹس کو نیب نے کلین چٹ دی ہوئی ہے جب کہ نیب کے متبادل قانون لانا ہمارے دائرہ اختیار میں ہے، صوبائی اسبملی قانون سازی کر سکتی ہے جب کہ قانون میں نیب اگر کسی قانون پر ہاتھ ڈال دے تو کوئی اس کو ہاتھ نہیں لگا سکتا۔

وزیراعلیٰ سندھ کا کہنا تھا کہ سندھ حکومت آئین سے ہٹ کر کچھ نہیں کرسکتی، پہلے ہمیں بدنیت پھر کہا جاتا ہے وفاق کے خلاف ہیں، قانون سازی کا اختیار ہے لہذا اعتراض ہوہی نہیں سکتا جب کہ احتساب کمیشن کے سربراہ کا تقرر کمیٹی کرے گی۔ ان کا کہنا تھا کہ احتساب کمیشن کے سربراہ کا انتخاب حکومت نہیں کرے گی،

چیئرمین کے تقرر کے لیے اراکین پر مشتمل کمیٹی بنائی جائے گی جب کہ ہمارے قانون قومی اسمبلی یا اور کوئی ملک نہیں بنائے گا۔ مراد علی شاہ نے رکن ایم کیو ایم (پاکستان) فیصل سبزواری کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان فیڈریشن پر میں آپ سے زیادہ یقین رکھتا ہوں، آر او پلانٹس پر آپ چلاتے ہیں اس پر نیب نے کلین چٹ دی ہوئی ہے جب کہ ٹریکٹراسکینڈل سبسڈی میں بھی نیب نے کلین چٹ دی۔ واضح رہے کہ سندھ اسمبلی نے چند روز قبل نیب کی جگہ صوبائی سطح پر انسداد بدعنوانی بل منظور کیا تھا تاہم گورنر سندھ نے اس پر دستخط کرنے کے بجائے اسے اسپیکر کو واپس بھجوادیا تھا۔

 

 

ایمز ٹی وی (کراچی) وزیر تعلیم سندھ جام مہتاب ڈہر کی ہدایت پر کرپشن میں ملوث 100 سے زائد افسران کو شوکاز نوٹس جاری کردئیے گئے۔ وزیر تعلیم سندھ کی ہدایت پر کرپشن میں ملوث 100 سے زائد ڈسٹرکٹ ایجوکیشن افسران، پرنسپلز، ہیڈماسٹرز اور گریڈ 17 سے گریڈ 19 تک کے افسران کو شو کاز نوٹس جاری کیے گئے ہیں۔ وزیرتعلیم سندھ جام مہتاب ڈہر کے مطابق کرپشن میں ملوث کسی بھی افسر کو نہیں بخشا جائے گا جبکہ ریٹائرڈ ملازمین کے کیسز بھی متعلقہ محکمے کو بھیجے جارہے ہیں

 

 

 

ایمزٹی وی (تجارت)زکوٰۃ کی تقسیم کا نظام بینکوں سے موبائل فون پر منتقل کیے جانے سے ہزاروں مستحقین زکوٰۃ سے محروم ہو گئے ،کروڑوں روپے کی خورد برد کے انکشافات بھی ہوئے ہیں ، بدعنوان عناصر نے معاشرے کے مستحق ترین افراد کو بھی نہ بخشا،خورد برد میں ملوث ڈسٹرکٹ زکوٰۃ کمیٹی لاہور کے 14 ملازمین برطرف کردئیے گئے
رپورٹ کے مطابق 2014تک لاہور کے 10 ہزار 9سو 73 مستحقین میں زکوٰۃ بینکوں کے ذریعے تقسیم کی جاتی تھی جہاں متعلقہ افراد خود جا کر اپنا کراس چیک جمع کراتے تھے اورپھر زکوٰۃ اُن کے اکائونٹ میں منتقل کر دی جاتی تھی ،اِس تمام عمل کا پورا ریکارڈ بھی موجود رہتا تھا لیکن 2014 میں اُس وقت کے سیکرٹری حبیب الرحمان اور ایڈمنسٹریٹرزکوٰۃ پنجاب یوسف بٹ نے مختلف اضلاع کی زکوٰۃ کمیٹیوں کے چیئرمینوں کی مخالفت کے باوجود ایک موبائل کمپنی کے ساتھ معاہدہ کرکے زکوٰۃکی تقسیم کا تمام نظام کمپنی کے سپرد کردیا ، اس نئے نظام کے تحت رقم کی تقسیم کا کوئی ریکارڈ رکھا جاتا ہے نہ ہی یہ پتہ چلایا جاسکتا ہے کہ کس مستحق تک رقم پہنچی اور کون اِس سے محروم رہ گیا ہے ،2014 سے اب تک مستحقین میں 13 کروڑ روپے تقسیم کیے جاچکے ہیں لیکن پتہ چلا ہے کہ اِس دوران ہزاروں مستحقین تک رقم پہنچی ہی نہیں بلکہ اِن کے حصے کی رقوم بدعنوان عناصر لے اُڑے ،بہتی گنگا میں ہاتھ دھونے وا لوں کی بدعنوانیاں مسلسل سامنے آرہی ہیں ۔
ذرائع کے مطابق اب تک لاہور کی 12 سو 84 زکوٰۃ کمیٹیوں میں سے 449 کمیٹیوں کے مالی معاملات کی جانچ پڑتال کی گئی ہے ،اس دوران بھاری رقوم کی خوردبرد سامنے آئی ہے جس پر کارروائی کرتے ہوئے اب تک ڈسٹرکٹ زکوٰۃکمیٹی لاہو ر میں 2آڈیٹرز اور 12 کلرکوں کو برطرف کیا جاچکا ہے جبکہ کسی بھی زکوٰۃکمیٹی کا چیئرمین اِن بدعنوانیوں میں ملوث نہیں پایا گیا ، موجودہ نظام کے تحت چیئرمینوں کو بھی علم نہیں ہوپاتا کہ اُن کے پاس رجسٹرڈ مستحقین تک زکوٰۃ کی رقم پہنچی ہے یا نہیں ،اِس حوالے سے ڈسٹرکٹ زکوٰۃ کمیٹی لاہورکے چیئرمین نوید انجم نے بتایا ہے کہ گڑبڑ کے معاملات سامنے آئے ہیں ،تمام معاملے کی تحقیقات کے لیے اعلیٰ سطح کی تحقیقاتی کمیٹی تشکیل دینے کے لیے وزیراعلیٰ پنجاب کو بھی خط لکھ دیا ہے تاکہ جو بھی اِس میں ملوث ہے اپنے انجام سے نہ بچ سکے ،واضح رہے کہ زکوٰۃ بینکوں کے بجائے موبائل کمپنی کے ذریعے تقسیم کرنے کا پائلٹ پراجیکٹ 2014 میں پنجاب کے تین اضلاع شیخوپورہ، حافظ آباد اور لاہو رمیں شروع کیا گیا تھا۔
 

 

 

ایمزٹی وی(اسلام آباد)وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان نے کہا ہے کہ کچھ لوگوں نے ملک میں ہیجان انگیزی اور افراتفری کی سیاست کا ٹھیکہ اٹھا لیا ہے۔
زرائع کے مطابق ایک تقریب سے خطاب کے دوران وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ میں نے اس مٹی کا پانی پیا ہے اور اس سے وفا بھی کی ہے، اپنی ساری زندگی کوئی ایسا کام نہیں کیا جس سے نظریں نیچی ہوں، کوئی فیکٹری نہیں یا پٹرول پمپ نہیں بنایا۔ ہمیشہ یہ ہی چاہا کہ جب حکومت ملے تو ملک کا پیسا عوام کی خدمت میں نچھاور کروں اور جب اپوزیشن میں آؤں تو حق کی آواز بلند کرسکوں اور کوئی مجھے خرید نہ سکے۔
چوہدری نثار کا کہنا تھا کہ فیصلے گلیوں اور چوراہوں پر نہیں بلکہ منتخب پارلیمان، اعلی عدالتوں اور عوام کی عدالت میں ہوتے ہیں، کچھ لوگوں نے ملک میں ہیجان انگیزی اور افراتفری کی سیاست کا ٹھیکہ اٹھا لیا ہے، اس قسم کی سیاست اور بلاجواز محاذ آرائی جمہوریت کے لیے زہر قاتل ہے۔

 

 

ایمزٹی وی(مظفرآباد) وزیر اعظم آزاد کشمیر اپنے والد گرامی راجہ حیدر خان کی 51ویں برسی کےموقع پر تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ جو افسر کام نہیں کرے گا یا بدعنوانی میں ملوث ہوگا وہ اپنی سیٹ پر نہیں بیٹھ سکے گا ،خواہ وہ میرا کوئی قریبی عزیز ہی کیوں نہ ہو، اب گھروں میں بیٹھ کر کوئی ٹھیکے لے سکے گا اور نہ کمیشن، میرے والد میرے محسن اور خوددار انسان تھے جنہوں نے اپنی اقدار پر سمجھوتہ نہیں کیا،آزاد کشمیر کے اندر بلدیاتی انتخابات اکتوبر میں ہونگے
۔ برسی کی تقریب میں مختلف مکاتب فکر کے افراد نے شرکت کی اور راجہ محمد حیدر خان کی سیاسی ، سماجی اورقومی خدمات و کردار کو شاندار الفاظ میں خراج عقیدت پیش کیا ۔ برسی کی تقریب سے صدر آزاد کشمیر سردار مسعود خان ، وزرا اور دیگر جماعتوں کے زعما نے بھی خطاب ، تقریب کے اختتام پر علامہ مفتی کفا یت حسین نقوی نے راجہ محمد حیدر خان کی روح کے ایصال ثواب کیلئے فاتحہ خوانی کروائی۔ -

 

 

ایمزٹی وی(میکسیکو)میکسیکو کے سابق گورنر کو گوائٹےمالاسے گرفتار کر لیا گیا ۔ میڈیا ذرائع کے مطابق انٹرپول اور گوائٹے مالا پولیس نے مشترکہ کارروائی کرتے ہوئے6ماہ سے مفرور میکسیکو کی ریاست دیرا کروز کے سابق گورنر ہاویئر دورتے کو گرفتار کر لیاگیا ہے ۔ ان پربدعنوانی کے ساتھ ساتھ منظم جرائم میں ملوث ہونے اورلاکھوں ڈالر کے غبن کے الزامات ہیں۔گوائٹے مالاپولیس کا کہنا ہے کہ سابق گورنرکوشہرسولولہ میں ایک ہوٹل کی لابی سے پکڑا گیا ہے۔ ہاویئردورتے پرالزام ہے کہ انہوں نے عوامی وسائل میں سے ساڑھے تین کروڑڈالرکا غبن کیا ہے۔ ہاویئردورتے نے کرپشن کے الزامات کا سامنا کرنے کےلئے اپنا عہدہ چھوڑا تھا تاہم وہ اکتوبر 2016ءمیں ملک سے فرار ہوگئے تھے۔ان کے دورمیں ریاست ویراکروز ملک کا انتہائی خطرناک علاقہ بن گئی تھی۔ وہاں 17 صحافیوں کو بھی قتل کیا گیا۔

 

 

ایمزٹی وی(تلہ گنگ)تحریک انصاف کے سربراہ عمران خان نے کہا ہے کہ پاکستان کا سب سے بڑا مسئلہ کرپشن اور منی لانڈرنگ ہے،خرابی کی جڑ یہ ہی چیزیں ہیں جنہیں قابو کرنا ہوگا،قوم کو خوشخبری سناتا ہوں ملک بدلنے والا ہے۔
تلہ گنگ میں جلسے سے خطاب کرتے ہو ئے عمران خان کا کہنا تھا کہ کرپشن کا مطلب عوام کا پیسا چوری کرنا ہے ،کرپٹ آدمی کسی بھی پارٹی کا ہو قوم کو اس کے خلاف کھڑا ہونا ہوگا،اقتدار میں آکر قومی بینکوں سے قرضہ معاف کرانا کرپشن ہے ، اقتدار میں آکر حساب لیں گے۔
خوشخبری سناتا ہوں ملک بدلنے والا ہے،تحریک انصاف پورے ملک میں پھیل چکی ہے جبکہ دیگر جماعتیں صوبوں تک محدود ہیں ،پاکستان کی ترقی کی دنیا میں مثالیں دی جاتی تھیں لیکن کرپشن،قرضے معاف کرانا اور منی لانڈرنگ جیسے معاملات نے نہ صرف اس ملک کی ترقی روکی بلکہ اسے پیچھے دھکیل دیا،بدقسمتی ہے اللہ نے جتنے وسائل دیئے ہم نے اس کا فائدہ نہیں اٹھایاگیااورآج کی صورت حال ہمارے سامنے ہے۔
عمران خان نے کہا کہ المیہ یہ ہے کہ شرجیل میمن نے5ارب کی کرپشن کی لیکن جب وہ واپس ملک آیا تو اسے ہار ڈالے گئے،ڈاکٹر عاصم پر460ارب روپے کی کرپشن کا الزام ہے اور مجھے افسوس ہوتا ہے کہ خیبر پختون خوا کا پورا بجٹ ہی 113ارب روپے کا ہے،کرپٹ آدمی کسی بھی پارٹی کا ہو قوم کو اس کے خلاف کھڑا ہونا ہوگا۔
آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ کے معاملے پر عمران نے کہا کہ پولیس اس وقت ٹھیک ہو گی جب میرٹ پر ٹھیک آئی جی لگے گا سندھ کا آئی جی اس لیے بدلا گیا کہ وہ غلط کام نہیں کرنےدے رہاتھا،پولیس اس وقت ٹھیک ہو گی جب سیاسی مداخلت روکی جائے گی۔
خیبر پختونخوا کی پولیس کو ٹھیک کیا، سیاسی مداخلت ختم کی ، ایماندار آئی جی لگایا اس نے پولیس کوٹھیک کیا،جوخیبر پختونخوا میں جزا اور سزا کا قانون آیا وہی قانون پورے پاکستان میں لائیں گے،خوشخبری سناتا ہوں ملک بدلنے والا ہے۔
 

 

 

ایمز ٹی وی(اسپورٹس) نرم مزاج مصباح الحق فکسرز کیخلاف سخت کارروائی چاہتے ہیں ۔ ٹیسٹ کپتان نے سٹے بازی میں ملوث کھلاڑیوں پرتاحیات پابندی کا مطالبہ کردیا ۔
کہتے ہیں بڑی محنت سے کرپشن کا داغ دھویا،ایک کیس نے سب برباد کردیا ۔ ساتھ ہی بین الاقومی پاکستانی کرکٹر بسمہ معروف ویمن ٹیم کی کپتان مطمئن ہیں کہتی ہیں کہ شکر ہے فکسنگ کی وبا ان کی ٹیم میں موجود نہیں۔

 

 

ایمز ٹی وی(لاہور) پاک فوج نے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے نئے جنرلز کو خبردار کیا ہے کہ افغانستان میں برطانیہ اور امریکہ نے داعش اور طالبان کی پیش قدمی نہیں روکی تو انہیں معاملات میں بگاڑ کا سامنا کرنا پڑے گا۔ غیر ملکی خبر رساں ادارے کو دئیے گئے ایک انٹرویو میں پاک فوج کے ذرائع کا کہنا ہے کہ افغانستان سے غیر ملکی افواج کے انخلاءکے بعد پیدا ہونے والی سیکیورٹی صورتحال کا مطلب ہے کہ یورپ کو اب کنٹرول کھونے کا سامنا ہے۔ اگر داعش اور طالبان دوبارہ مضبوط ہوتے رہے تو روس سینٹرل ایشیاءمیں خود کو محفوظ رکھنے کا بہانہ استعمال کرتے ہوئے سیریا جیسی مداخلت کر سکتا ہے۔ پاک فوج کے ذرائع کا کہنا ہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے سیکرٹری ڈیفنس تعینات کئے جانے والے جنرل (ر) جیمز میٹس اور ریزولوٹ سپورٹ مشن کمانڈر جنرل جان نکلسن کے ساتھ حالیہ ہفتوں میں اعلیٰ سطحی ملاقاتیں ہوئیں۔ جنرل نکلسن نے گزشتہ مہینے خود بھی یہ اعتراف کیا کہ افغان فورسز ایک بار پھر طاقت کے حصول کیلئے برسرپیکار طالبان کے خلاف تعطل کا شکار ہیں۔ پاک فوج کے ذرائع کا کہنا ہے کہ ”افغان فورسز کا تعطل طالبان کیلئے جیت ہی ہے، ہم نے جنرل میٹس کو بتایا ہے کہ افغانستان کنٹرول سے باہر ہو رہا ہے، اور اگر چیزوں کو درست سمت میں نہ لایا گیا تو امریکہ کو بڑے بحران کا سامنا پڑے گا۔ داعش بھی یہاں پنپ رہی ہے اور اگر انہوں نے سیریا اور عراق کو چھوڑ دیا تو دوبارہ اکٹھا ہونے کیلئے اگلی جگہ افغانستان کی سرزمین ہو گی۔“ پاکستان نے افغان بارڈر کو اپنی جانب سیل کرنے کیلئے ناکافی اقدامات پر کابل حکومت کو تنقید کا نشانہ بنایا ہے، پاکستانی حکومت کے مطابق دہشت گرد یہیں سے پاکستان اور افغانستان کی سرزمین پر حملہ آور ہو رہے ہیں۔ تاہم پاکستان نے یہ بھی تسلیم کیا ہے کہ کابل افغان فوج کی ناکافی صلاحیتوں کے باعث محدود ہے۔ انہوں نے کہا کہ ”افغان فوج میں 350,000 اہلکار ہیں لیکن ان میں سے صرف 20,000 ہی کامبیٹ مشن کیلئے اہل ہیں۔ ان کے 1,000 جنرل ہیں جن میں سے زیادہ تر کی تعیناتی میرٹ کے بجائے قبائل کیساتھ تعلقات کی بناءپر ہوئی ہے۔ مسئلہ یہ ہے کہ آپ ایک گدھے کو سرپٹ دوڑنا نہیں سکھا سکتے۔“ پاک فوج کے ذرائع نے مزید کہا کہ روس کو ڈر تھا کہ یورپ اس معاملے کو اس کی ”راہداری“ کو عدم استحکام سے دوچار کرنے کیلئے استعمال کر رہا ہے اور افغانستان میں فوجی آپریشن کی وسعت کیلئے اسے بہانے کے طور پر استعمال کر سکتا ہے۔ گزشتہ مہینے روس نے افغانستان کے معاملے پر علاقائی طاقتوں کی ایک کانفرنس منعقد کی جس میں اس بات کی اجانب اشارہ دیا گیا کہ افغانستان میں اس طرح کی سٹریٹجی کی ابتدائی شکل کیسی ہو سکتی ہے۔ امریکہ کے بغیر منعقد ہونے والی یہ سمٹ طالبان کے ساتھ مذاکرات کیلئے بلائی گئی اور اس سے پہلے ہی روس نے طالبان کے ساتھ خفیہ رابطے شروع کر دئیے تھے۔ روس کا کہنا ہے کہ داعش کیساتھ لڑنے کیلئے طالبان کو استعمال کیا جا سکتا ہے۔ امریکہ کا یہ ماننا ہے کہ ماسکو کے طالبان کے ساتھ رابطے افغانستان میں پراکسی اثاثوں کی تعمیر کیلئے روس کی مدد ہے

 

 

ایمز ٹی وی(کراچی) میئرکراچی وسیم اختر کا کہناہے کہ سندھ حکومت کے جاری کر دہ منصوبوں میں ہونے والی کرپشن سب کے سامنے لاؤں گا۔
مئیر کراچی وسیم اختر نے کراچی کے علاقے صدر میں قائم شہاب الدین مارکیٹ کا دورہ کیا اور مارکیٹ ایسوسی ایشن کےعہدیداروں سے ملاقات کی۔
اس موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ شہر میں جاری منصوبوں کی وہ خود جانچ کررہے ہیں۔
سندھ حکومت کے جاری کچھ منصوبوں میں بد عنوانی کے انکشافات ہوئے ہیں جس کے متعلق وائٹ پیپر جاری کر کے حقائق عوام کے سامنے لائے جائیں گے۔
ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ اتناوقت ہی نہیں کہ پی ایس ایل پر نظر رکھوں تاہم کراچی کے منصوبوں پر خود نظر رکھ رہا ہوں۔
 
 

 

Page 7 of 16